تاریخ شائع کریں2022 4 December گھنٹہ 15:28
خبر کا کوڈ : 575696

خلیج فارس میں غیرعلاقائی بحری بیڑے کی موجودگی میں نمایاں کمی آئی

خلیج فارس میں غیر علاقائی بحری بیڑوں کی نمایاں کمی اس بات کی نشاندہی کر رہی ہے کہ  اسلامی جمہوریہ ایران نے خطے میں پائیدار امن اور سلامتی قائم کیا ہے۔
خلیج فارس میں غیرعلاقائی بحری بیڑے کی موجودگی میں نمایاں کمی آئی
 اسلامی جمہوریہ ایران کی مسلح افواج کے سربراہ نے کہا ہے کہ گزشتہ کہ مقابلے میں خلیج فارس میں غیرعلاقائی بحری بیڑے کی موجودگی میں نمایاں کمی آئی ہے۔

میجر جنرل "محمد باقری" نے آج بروز اتوار کو بوشہر میں اسلامی جمہوریہ ایران کی فضائیہ کے چھٹے اڈے کے فوجی ساز و سامان کا دورہ کرنے کے موقع پر صحافیوں کے ساتھ ایک انٹرویو میں کہا کہ خلیج فارس میں غیر علاقائی بحری بیڑوں کی نمایاں کمی اس بات کی نشاندہی کر رہی ہے کہ  اسلامی جمہوریہ ایران نے خطے میں پائیدار امن اور سلامتی قائم کیا ہے۔

انہوں نے مزید کہا کہ علاقے میں پیدا ہونے والی یہ مکمل سیکورٹی، اسلامی جمہوریہ ایران کی ذمہ داری کو ظاہر کرتی ہے جس نے چوبیس گھنٹے فضائی اور سمندری گشت کو یقینی بنایا ہے۔

اسلامی جمہوریہ ایران کی مسلح افواج کے سربراہ نے خلیج فارس میں سیکورٹی فراہم کرنے کے سائے میں، بوشہر کے انتہائی اسٹریٹجک صوبے میں لوگوں اور ساحلی باشندوں کی سمندری تجارت اور ماہی گیری کے میدان میں اور تیل اور گیس کے میدان میں سرگرمیوں کا مشاہدہ کر رہے ہیں۔

باقری نے مزید کہا کہ موصولہ اطلاعات کے مطابق، فوج اور قانون نافذ کرنے والے یونٹس بشمول فوج، آئی آر جی سی، قانون نافذ کرنے والی کمان اور وزارت دفاع، صوبہ بوشہر میں ملک کی سرحدوں کی حفاظت کے لیے پوری تیاری اور اعلی صلاحیت رکھتے ہیں۔
https://www.taghribnews.com/vdchwmnm-23nq-d.4lt2.html
آپ کا نام
آپکا ایمیل ایڈریس