تاریخ شائع کریں2022 1 October گھنٹہ 09:22
خبر کا کوڈ : 567255

ایرانی صدر نے "اسلامی جمہوریہ ایران کی شنگھائی تعاون تنظیم میں شمولیت" کے بل پر دستخط

یہ بل 26 ستمبر کو سید ابراہیم رئیسی کے دستخط کے ساتھ پارلیمنٹ کو بھیجا گیا تاکہ قانونی طریقہ کار سے گزر کر آئین کے آرٹیکل 77 کی تعمیل کی جا سکے۔ آئین کے اس اصول کے مطابق، بین الاقوامی معاہدوں کو پارلیمنٹ میں منظوری دینے کی ضرورت ہے۔
ایرانی صدر نے "اسلامی جمہوریہ ایران کی شنگھائی تعاون تنظیم میں شمولیت" کے بل پر دستخط
ایرانی صدر نے "اسلامی جمہوریہ ایران کی شنگھائی تعاون تنظیم میں شمولیت" کے بل پر دستخط کرکے اسے قانونی مراحل سے گزرنے کیلئے پارلیمنٹ کا حوالہ کیا گیا۔

16 ایرانی وزرا نے 7 ستمبر 2022 کو علاقائی اور بین الاقوامی تنظیموں اور اداروں سے تعاون کی تقویت، سیاسی اور اقتصادی رکاوٹوں بشمول ایران کیخلاف ظالمانہ پابندیوں کو بے اثر اور دور کرنے، علاقائی اور بین الاقوامی تنظیموں میں فعال اور تعمیری موجودگی، قومی مفادات کو محفوظ بنانے کے لیے موجودہ صلاحیتوں سے فائدہ اٹھاتے ہوئے اور انصاف اور ظلم کے خلاف اور علاقائی امن و استحکام کے احساس کے ساتھ موجودہ نظام کو تبدیل کرنے کی کوشش کے مقصد سے "اسلامی جمہوریہ ایران کی شنگھائی تعاون تنظیم میں شمولیت" کے بل کی منظوری دی۔

یہ بل 26 ستمبر کو سید ابراہیم رئیسی کے دستخط کے ساتھ پارلیمنٹ کو بھیجا گیا تاکہ قانونی طریقہ کار سے گزر کر آئین کے آرٹیکل 77 کی تعمیل کی جا سکے۔ آئین کے اس اصول کے مطابق، بین الاقوامی معاہدوں کو پارلیمنٹ میں منظوری دینے کی ضرورت ہے۔
http://www.taghribnews.com/vdcjiaeiiuqem8z.3lfu.html
آپ کا نام
آپکا ایمیل ایڈریس