تاریخ شائع کریں2022 24 September گھنٹہ 10:06
خبر کا کوڈ : 566474

ریاض اور تہران کے درمیان کشیدگی میں کمی کے بارے میں عراق اور عرب کے وزرائے خارجہ کی مشاورت

اس بیان کے مطابق سعودی عرب اور عراق کے وزرائے خارجہ کے درمیان ہونے والی ملاقات میں بغداد اور ریاض کے درمیان دوطرفہ تعلقات اور دونوں ممالک کے مفادات کو پورا کرنے کے لیے ان میں بہتری لانے کے طریقوں پر تبادلہ خیال کیا گیا۔
ریاض اور تہران کے درمیان کشیدگی میں کمی کے بارے میں عراق اور عرب کے وزرائے خارجہ کی مشاورت
عراق کے وزیر خارجہ فواد حسین نے جمعہ کے روز تاکید کی ہے کہ بغداد دنیا کے مختلف ممالک کے ساتھ بہترین تعلقات قائم کرنا چاہتا ہے۔

اس رپورٹ کے مطابق عراقی وزارت خارجہ کے بیان میں کہا گیا ہے کہ فواد حسین نے نیویارک میں اقوام متحدہ کی جنرل اسمبلی کے 77ویں اجلاس کے موقع پر اپنے سعودی ہم منصب فیصل بن فرحان سے ملاقات کی۔

اس بیان کے مطابق سعودی عرب اور عراق کے وزرائے خارجہ کے درمیان ہونے والی ملاقات میں بغداد اور ریاض کے درمیان دوطرفہ تعلقات اور دونوں ممالک کے مفادات کو پورا کرنے کے لیے ان میں بہتری لانے کے طریقوں پر تبادلہ خیال کیا گیا۔

عراقی وزارت خارجہ کے بیان میں کہا گیا ہے کہ دونوں فریقوں نے صورتحال کو پرسکون کرنے اور ریاض اور تہران کے درمیان کشیدگی کو کم کرنے کے لیے بغداد کی کوششوں پر بھی بات کی۔

عراق کے وزیر خارجہ نے اس بات پر بھی زور دیا کہ یہ ملک دنیا کے مختلف ممالک بالخصوص عرب ممالک اور پڑوسیوں کے ساتھ مشترکہ مفادات کے مطابق اور مشترکہ خطرات کا سامنا کرتے ہوئے بہترین تعلقات قائم کرنا چاہتا ہے۔

ساتھ ہی فواد حسین نے بات چیت کے ذریعے خطے میں استحکام کی واپسی اور ملکوں کے اندرونی معاملات میں عدم مداخلت کی کوششوں کو تیز کرنے پر زور دیا۔

عراقی وزیر خارجہ نے داعش کے دہشت گرد گروہوں کی باقیات سے نمٹنے کے لیے سیکورٹی ہم آہنگی کی ضرورت پر بھی زور دیا۔

دوسری جانب سعودی وزیر خارجہ کا کہنا تھا کہ خطے میں کشیدگی میں سلامتی اور استحکام کی واپسی کے لیے پرامن حل نکالنے کے لیے سب کی کوششوں اور تعاون کی ضرورت ہے ۔

واضح رہے کہ اقوام متحدہ کی جنرل اسمبلی کا 77 واں اجلاس نیویارک میں جاری ہے۔
http://www.taghribnews.com/vdcbz0bsarhb0ap.kvur.html
آپ کا نام
آپکا ایمیل ایڈریس