تاریخ شائع کریں2022 28 June گھنٹہ 15:57
خبر کا کوڈ : 555352

لبنان میں جاسوسوں کو بھرتی کرنےکا اسرائیل کا وسیع منصوبہ

ایک سیکورٹی ذریعے کے مطابق صیہونی حکومت نے لبنان میں جاسوسوں کو راغب کرنے کے لیے مختلف عنوانات کے تحت سوشل نیٹ ورکس پر درجنوں پلیٹ فارمز شروع کیے ہیں۔
لبنان میں جاسوسوں کو بھرتی کرنےکا اسرائیل کا وسیع منصوبہ
 لبنان کے ایک سیکورٹی ذریعے نے بتایا ہے کہ صیہونی حکومت کی انٹیلی جنس سروسز نے سوشل نیٹ ورکس پر درجنوں پلیٹ فارمز کا آغاز کیا ہے جس میں لبنان میں ملازمت کے متلاشیوں کو ملازمت دینے اور ان کو ملازمت دینے کے نام سے آخرکار جاسوسی کے لیے بھرتی کیے گئے افراد کو استعمال کیا جا رہا ہے۔

اشاعت کے مطابق ، سیکورٹی ذرائع نے مزید کہا کہ لبنانیوں کے ساتھ رابطے معمول کی بات ہے اور اسرائیلی بعض اوقات رابطوں میں اپنا چہرہ بھی دکھاتے ہیں۔ اسرائیلی سیکیورٹی ایجنسی نے اس منصوبے کے لیے بجٹ مختص کیا ہے جو کہ بڑے حفاظتی اقدامات کے مقابلے میں زیادہ نہیں ہے۔ تعاون کرنے والوں کو ادا کی جانے والی رقم $100 اور $200 کے درمیان ہے، اور جو لوگ بڑے کام کرتے ہیں وہ زیادہ وصول کریں گے۔ یہ رقوم لاطینی امریکہ، مشرقی یورپ اور دنیا کے دیگر حصوں میں ادائیگی کرنے والی کمپنیوں کے ذریعے ادا کی جاتی ہیں۔

رپورٹ کے مطابق اس کیس میں زیر حراست افراد کی بڑی تعداد کو سروس کی درخواست کرنے والے فریق کی شناخت کا علم نہیں ہے۔ اس سلسلے میں، لبنانی پبلک سیکیورٹی نے فوجوں میں شمولیت اختیار کی ہے جسے ایک سیکیورٹی ذریعہ نے لبنان میں اسرائیلی انٹیلی جنس سرگرمیوں کا خاتمہ قرار دیا ہے۔ لبنان کے پبلک سیکورٹی انویسٹی گیشن ڈیپارٹمنٹ نے صہیونی دشمن کے ساتھ مل کر متعدد مشتبہ افراد کو گرفتار کیا ہے۔ لبنانی اندرونی سیکورٹی فورسز کی انٹیلی جنس سروس نے بھی اپنی سرگرمیاں تیز کر دی ہیں اور ذاتی نیٹ ورکس پر کام کرنے والے مزید افراد کو گرفتار کر لیا ہے۔

اشاعت میں مزید کہا گیا ہے کہ لبنان کا العرقوب علاقہ اب بھی جاسوسوں کے نیٹ ورک کو سمجھنے کی کوشش کر رہا ہے جو چند ہفتے قبل لبنانی انٹیلی جنس نیٹ ورک میں داخل ہوئے تھے۔ گذشتہ سال لبنانی سکیورٹی فورسز نے ایک جاسوس کو گرفتار کیا تھا جو تقریباً 25 سال سے صیہونی حکومت سے منسلک ہے اور اس پر فلسطینی اسلامی جہاد کے دو رہنماؤں کے قتل کا شبہ ہے۔ 

اسی دوران ایک لبنانی وزیر نے حالیہ عرصے میں اسرائیل کے 17 جاسوسی نیٹ ورکس کو تباہ کرنے کا اعلان کیا اور لبنانی پارلیمنٹ کے اسپیکر نے سیکیورٹی کی اس کامیابی کو منفرد قرار دیا۔ 
http://www.taghribnews.com/vdcenn8nwjh8nxi.dqbj.html
آپ کا نام
آپکا ایمیل ایڈریس