تاریخ شائع کریں2022 8 April گھنٹہ 21:17
خبر کا کوڈ : 544852

ماسکو: نیٹو نے یوکرین میں روس کے ساتھ پراکسی جنگ شروع کر دی ہے

روس کی وزارت خارجہ کا کہنا ہے کہ نیٹو اتحاد یوکرین کے راستے روس کے ساتھ جنگ ​​میں ہے۔
ماسکو: نیٹو نے یوکرین میں روس کے ساتھ پراکسی جنگ شروع کر دی ہے
روسی وزارت خارجہ نے اعلان کیا کہ نیٹو نے اس ملک میں یوکرین کے ساتھ پراکسی جنگ شروع کر دی ہے۔

 روسی وزارت خارجہ کے مطابق نیٹو کی جانب سے یوکرین کو ہتھیار بھیجنے کا اقدام تنازع کو طول دے گا۔

روسی وزارت خارجہ نے مزید کہا کہ "نیٹو کا اتحاد روس کے ساتھ یوکرین پر جنگ میں ہے۔"

دریں اثناء روسی صدارتی ترجمان دمتری پیسکوف نے آج (جمعہ کو) کہا کہ ماسکو کو توقع ہے کہ یوکرین میں ایک خصوصی فوجی آپریشن جلد مکمل ہو جائے گا۔

روسی فوج نے جنوبی یوکرین کے شہر اوڈیسا میں غیر ملکی فوجیوں کے تربیتی مرکز کو تباہ کرنے کا بھی اعلان کیا۔

روسی وزارت دفاع نے آج (جمعہ) ایک بیان میں کہا کہ "روسی مسلح افواج نے اوڈیسا شہر کے شمال مشرق میں کرائے کے اجتماع اور تربیتی مرکز کو انتہائی درستگی والے میزائلوں سے تباہ کر دیا ہے۔"

اسپوتنک کے مطابق، بیان میں کہا گیا ہے کہ "یوکرین فورسز کے ہتھیار اور گولہ بارود جو کہ ڈینباس کے علاقے کے کئی شہروں کے ریلوے اسٹیشنوں تک پہنچے تھے، کو بھی تباہ کر دیا گیا"۔

چند منٹ قبل، یوکرین کی حکومت نے دعویٰ کیا تھا کہ کراماٹرسک شہر کے ایک ریلوے اسٹیشن پر روسی میزائل حملے میں درجنوں شہری ہلاک اور متعدد زخمی ہوئے ہیں۔

تاہم، روسی وزارت دفاع نے Kyiv کے Kramatorsk ریلوے اسٹیشن پر آج ہونے والے مبینہ میزائل حملے کے بارے میں بیانات کی تردید کی۔

روس نے 24 فروری کو یوکرین میں خصوصی فوجی آپریشن شروع کیا۔ روسی صدر ولادیمیر پوتن نے کہا کہ اس آپریشن کا مقصد "ان لوگوں کی حمایت کرنا تھا جو آٹھ سالوں سے کیف حکومت کی طرف سے غنڈہ گردی اور نسل کشی کا شکار ہیں۔"

ان کے بقول، اس مقصد کے لیے یوکرین کو "مسلح کرنے اور اسے غیر فوجی بنانے" کا منصوبہ بنایا گیا ہے تاکہ ڈونباس کے علاقے میں "شہریوں کے خلاف خونی جرائم" کے ذمہ دار تمام جنگی مجرموں کو انصاف کے کٹہرے میں لایا جائے۔
http://www.taghribnews.com/vdchmknmi23nk6d.4lt2.html
آپ کا نام
آپکا ایمیل ایڈریس