تاریخ شائع کریں2021 29 July گھنٹہ 17:23
خبر کا کوڈ : 513349

آیت اللہ شیخ ابراہیم زکزکی چھے برسوں بعد جیل سے رہائی

آیت اللہ شیخ زکزکی کے دفتر نے بھی کادونا کی اعلی عدالت کے فیصلے کی تصدیق کی ہے - عدالت نے سرانجام اس بات کو تسلیم کرلیا کہ شیخ زکزکی اور ان کی اہلیہ پر حکومت کے ذریعے لگائے گئےسارے الزامات غلط اور بے بنیاد تھے
آیت اللہ شیخ ابراہیم زکزکی چھے برسوں بعد جیل سے رہائی
نائیجیریا کی اسلامی تحریک کے بانی اور مذہبی رہنما آیت اللہ شیخ ابراہیم زکزکی کو چھے برسوں بعد جیل سے رہائی کا حکم مل گیا

نائیجیریا کے صوبے کادونا کی اعلی عدالت نے آیت اللہ شیخ زکرکی اور ان کی اہلیہ کو سبھی الزامات سے بری کرتے ہوئےان کی رہائی کا حکم جاری کردیا -

مختلف میڈیا رپورٹوں میں ان کی رہائی کی تصویر بھی دکھائی گئی ہیں اور وہ کادونا میں اپنے بیٹے کے گھر پہنچ گئے ہیں -

آیت اللہ شیخ زکزکی کے دفتر نے بھی کادونا کی اعلی عدالت کے فیصلے کی تصدیق کی ہے - عدالت نے سرانجام اس بات کو تسلیم کرلیا کہ شیخ زکزکی اور ان کی اہلیہ پر حکومت کے ذریعے لگائے گئےسارے الزامات غلط اور بے بنیاد تھے

پچھلے مہینوں کے دوران آیت اللہ شیخ زکزکی کی رہائی کے حق میں نائیجیریا کے مختلف شہروں بالخصوص دارالحکومت ابوجا میں مظاہرے ہوتے رہے ہیں -

آیت اللہ شیخ زکزکی اور ان کی اہلیہ کو نائیجیریا کی فوج نے تیرہ دسمبر دوہزار پندرہ کو زاریا شہر میں حسینہ بقیت اللہ پر حملہ کرنے کے بعد گرفتار کرلیا تھا -

یہ حملہ اس وقت کیا گیا تھا جب لوگ اربعین حسینی کے پروگرام میں شریک تھے اور عزاداری کررہے تھے اس حملے مین سیکڑوں عزادار شہید اور زخمی ہوگئےتھے
http://www.taghribnews.com/vdceex8nojh8zxi.dqbj.html
آپ کا نام
آپکا ایمیل ایڈریس