تاریخ شائع کریں2021 16 June گھنٹہ 15:41
خبر کا کوڈ : 508088

شرپسند یہودی مذہبی رہنما کا مسجد اقصیٰ پر دھاوا

یہودہ گلک  کی جانب سے اشتعال انگیز دورہ اس وقت کیا گیا ہے جب ہزاروںصیہونی آبادکار فلسطین پر قبضے اور آبادکاری کو فیسٹیول کی طرح منانے کیلئے اشتعال انگیز مارچ "عربوں کیلئے موت” کی تیاری کررہے تھے۔
شرپسند یہودی مذہبی رہنما کا مسجد اقصیٰ پر دھاوا
شرپسند یہودی مذہبی رہنما نے اس وقت مسجد اقصیٰ پر دھاوا بولا جب ہزاروں صیہونی مذہبی جنونی آبادکار اشتعال انگیز مارچ میں شرکت کیلئے مقبوضہ بیت المقدس میں جمع ہورہے تھے۔

مقامی ذرائع کے مطابق گذشتہ روز صیہونی شرپسند مذہبی رہنما یہودہ گلک  نے سیکڑوں صیہونی مذہبی جنونیوں کے ہمراہ مسجد اقصیٰ پر دھاوا بولا اور مقدس مقامات کی بےحرمتی کی ،یہودہ گلک  کی جانب سے اشتعال انگیز دورہ اس وقت کیا گیا ہے جب ہزاروںصیہونی آبادکار فلسطین پر قبضے اور آبادکاری کو فیسٹیول کی طرح منانے کیلئے اشتعال انگیز مارچ "عربوں کیلئے موت” کی تیاری کررہے تھے۔

صیہونی شرپسندوں کی جانب سے مسجد اقصیٰ اور دیگر اسلامی مقدس مقامات پر دھاوے اور بے حرمتی کا سلسلہ 2003 سے شروع ہوا تھا جس کو مکمل ریاستی سرپرستی حاصل تھی، اردن اور محکمہ اوقاف سمیت مقبوضہ بیت المقدس کے اسلامی وقف کی جانب سے اس اقدام کی بھرپور مذمت کی گئی تھی تاہم صیہونی ریاست کا یہ اشتعال انگیز سلسلہ تاحال جاری ہے۔

واضح رہے کہ اسلامی مزاحمتی تحریک حماس کے عسکری ونگ القسام بریگیڈ کے ترجمان ابو عبیدہ کی جانب سے صیہونی ریاست کو متنبہ کیا گیا تھا کہ اگر مسجد اقصیٰ اور شیخ الجرح میں فلسطینیوں کے ساتھ غیر قانونی سلوک کیا گیا تو اس کا بھرپور جواب دیا جائے گا اس بیان کے  بعد صیہونی ریاست کے سیکیورٹی ادارے ہائی الرٹ کردیئے گئے تھے۔
 
http://www.taghribnews.com/vdcivvawvt1auu2.s7ct.html
آپ کا نام
آپکا ایمیل ایڈریس