تاریخ شائع کریں2022 14 August گھنٹہ 21:17
خبر کا کوڈ : 561470

چین کے اندرونی معاملات میں مسلسل مداخلت؛ امریکہ تائیوان کے ساتھ تجارت بڑھا رہا ہے

کیمبل کہتے ہیں: امریکی ایوان نمائندگان کی اسپیکر نینسی پیلوسی کا تائیوان کا دورہ واشنگٹن کی موجودہ پالیسیوں کے عین مطابق ہے اور بیجنگ نے سخت رد عمل ظاہر کیا ہے اور تائیوان پر دباؤ بڑھا کر امن و استحکام کو متاثر کیا ہے۔
چین کے اندرونی معاملات میں مسلسل مداخلت؛ امریکہ تائیوان کے ساتھ تجارت بڑھا رہا ہے
 وائٹ ہاؤس، جو ایک طرف ایک چین کو تسلیم کرنے کا دعویٰ کرتا ہے اور دوسری طرف چین پر دباؤ ڈالنے کے لیے تائیوان کو ایک ہتھیار کے طور پر استعمال کرنے کی کوشش کرتا ہے، چین کے اندرونی معاملات میں اپنی مداخلت پسندانہ پالیسیوں کو جاری رکھے ہوئے ہے، واشنگٹن نے اعلان کیا۔ خود تائیوان کے ساتھ تجارت بڑھانے کے لیے پرعزم ہے۔

فرانس پریس کے حوالے سے ارنا کی سنڈے کی رپورٹ کے مطابق، امریکی حکومت کے مشرقی ایشیا اور بحرالکاہل کے امور کے رابطہ کار اور جو بائیڈن کے مشیر کرٹ کیمبل کا کہنا ہے کہ واشنگٹن نے آئندہ چند دنوں میں ایک نیا تجارتی منصوبہ پیش کرنے کا فیصلہ کیا ہے۔ چین کے تائیوان کے تئیں چین کے رویے کا جواب تائیوان سے شروع کریں اور امریکی فوجیوں کو آبنائے تائیوان سے گزریں۔

کیمبل کہتے ہیں: امریکی ایوان نمائندگان کی اسپیکر نینسی پیلوسی کا تائیوان کا دورہ واشنگٹن کی موجودہ پالیسیوں کے عین مطابق ہے اور بیجنگ نے سخت رد عمل ظاہر کیا ہے اور تائیوان پر دباؤ بڑھا کر امن و استحکام کو متاثر کیا ہے۔

گزشتہ دنوں امریکی ایوان نمائندگان کے سپیکر کے تائیوان کے جزیرے کے دورے نے چین کے ساتھ مزید کشیدگی پیدا کر دی ہے۔ تائیوان کے جزیرے کے دورے کے بعد اور چین کے اعتراضات کے باوجود دیے گئے ایک بیان میں، پیلوسی نے دعویٰ کیا: "ہم چین کو تائیوان کو تنہا کرنے کی اجازت نہیں دیں گے۔"

اس بات پر زور دیتے ہوئے کہ تائیوان کے بارے میں امریکی پالیسی میں کوئی تبدیلی نہیں آئی ہے، پیلوسی نے کہا: تائیوان کے دورے کا ہمارا مقصد امریکہ کی حمایت یافتہ جمود پر مبنی مضبوط تعلقات کو ظاہر کرنا تھا۔

پیلوسی کے بیان کے جواب میں، چینی وزیر خارجہ وانگ یی نے کہا: "تائیوان امریکی سرزمین کا حصہ نہیں ہے اور اسے چینی سرزمین کا حصہ سمجھا جاتا ہے۔"

انہوں نے تائیوان کے حوالے سے چین کے اقدامات کو منصفانہ، قانونی اور متناسب قرار دیتے ہوئے کہا: بیجنگ کے اقدامات ملک کی علاقائی سالمیت اور آزادی کے تحفظ کے لیے کیے جاتے ہیں۔
http://www.taghribnews.com/vdccmsqpx2bqe08.c7a2.html
آپ کا نام
آپکا ایمیل ایڈریس