تاریخ شائع کریں2022 7 August گھنٹہ 17:58
خبر کا کوڈ : 560661

عمار حکیم و الکاظمی کی ملاقات، حکومت دہشت گردی کے خلاف جنگ جاری رکھے

 عراق کی قومی حکمت تحریک کے سربراہ "سید عمار حکیم" نے وزیر اعظم "مصطفی الکاظمی" کے ساتھ ملاقات میں حکومت کی دہشت گردی کے خلاف جنگ جاری رکھنے اور قومی مفادات کے تحفظ اور عراق کی ارضی خودمختاری کے احترام پر تاکید کی۔
عمار حکیم و الکاظمی کی ملاقات، حکومت دہشت گردی کے خلاف جنگ جاری رکھے
 عراق کی قومی حکمت تحریک کے سربراہ "سید عمار حکیم" نے وزیر اعظم "مصطفی الکاظمی" کے ساتھ ملاقات میں حکومت کی دہشت گردی کے خلاف جنگ جاری رکھنے اور قومی مفادات کے تحفظ اور عراق کی ارضی خودمختاری کے احترام پر تاکید کی۔ .

عمار حکیم نے آج (اتوار) حکمت ملی کے دفتر میں منعقد ہونے والی اس ملاقات میں عراقی وزیر اعظم الکاظمی کے ساتھ سیاسی، سماجی اور خدماتی پیش رفت کا جائزہ لیا۔

عراق کی قومی حکمت تحریک کے رہنما نے شہریوں اور حکومتی اداروں کو سیاسی قوتوں کے اختلافات سے دور رکھنے کی اہمیت پر بھی زور دیا۔

انہوں نے تیل کی قیمتوں میں اضافے سے حاصل ہونے والی آمدنی کو معاشی اور سماجی صورتحال کو بہتر بنانے اور ملکی آمدنی کے ذرائع کو متنوع بنانے کے لیے استعمال کرنے کی ضرورت پر بھی زور دیا اور کہا کہ آمدنی میں یہ اضافہ ایک عارضی صورتحال ہے جسے حکومت کے کرائے کی صورتحال کو ختم کرنے کے لیے استعمال کیا جانا چاہیے۔

حکیم نے بجلی کے شعبے پر توجہ دینے اور اسے مضبوط کرنے کی کوشش کرنے کی ضرورت کو بھی بیان کیا اور عراق کے صوبوں اور شہروں میں ملک گیر بجلی کی بندش کے تکرار کو روکنے کا مطالبہ کیا۔

انہوں نے سیاسی نظام کی اصلاح اور بدعنوانی کے خلاف جنگ پر توجہ دینے پر زور دیا اور ان اہداف کو قانونی طریقوں سے حاصل کرنے کی ضرورت پر زور دیا اور تمام قوتوں کی مشاورت کے اصول پر مبنی تاکہ تمام شعبوں کی عوامی اور سماجی حمایت حاصل کی جا سکے۔

عراق کی قومی حکمت تحریک کے رہنما نے حکومت اور سیکورٹی اداروں سے کہا کہ وہ دہشت گردوں کے خلاف اپنی فوجی اور سیکورٹی کارروائیاں جاری رکھیں۔

حکیم نے اس بات پر بھی زور دیا کہ عراق کے ہمسایہ ممالک اور دنیا کے ساتھ دوستانہ تعلقات کو قومی مفادات اور علاقائی خودمختاری کے احترام کے اصول کی بنیاد پر جاری رہنا چاہیے۔
http://www.taghribnews.com/vdcd9z0kfyt0996.432y.html
آپ کا نام
آپکا ایمیل ایڈریس