تاریخ شائع کریں2022 3 July گھنٹہ 19:12
خبر کا کوڈ : 556024

صہیونی فوجیوں نے 19 سالہ فلسطینی نوجوان کو گولی مار کر شہید کر دیا

فلسطین کی مزاحمتی کمیٹی نے ایک بیان میں اس فلسطینی نوجوان کو شہید کرنے پر صیہونی فوج کی کارروائی کی مذمت کرتے ہوئے کہا ہے کہ یہ اقدام مجرم صہیونیوں کے ماتھے پر کلنک ہے۔
صہیونی فوجیوں نے 19 سالہ فلسطینی نوجوان کو گولی مار کر شہید کر دیا
 صہیونی فوجیوں نے مغربی کنارے میں ایک 19 سالہ فلسطینی نوجوان کو گولی مار کر شہید کر دیا۔

فلسطینی ذرائع ابلاغ کی ارنا کی رپورٹ کے مطابق "کامل عبدالله علاونه" ہفتے کے روز جنین ضلع کے جبہ گاؤں کے نوجوانوں اور صہیونی فوجیوں کے درمیان جھڑپ کے دوران زخمی ہو گئے تھے اور زخموں کی شدت کے باعث وہ اتوار کے روز دم توڑ گئے۔

فلسطین کی مزاحمتی کمیٹی نے ایک بیان میں اس فلسطینی نوجوان کو شہید کرنے پر صیہونی فوج کی کارروائی کی مذمت کرتے ہوئے کہا ہے کہ یہ اقدام مجرم صہیونیوں کے ماتھے پر کلنک ہے۔

اس بیان میں کہا گیا ہے: "کامل عبدالله علاونه"شہید اور فلسطین کے تمام شہداء کا خون وطن اور مقدسات کی ڈھال اور مضبوط باڑ اور قدس کی آزادی کے مجاہدین اور جنگجوؤں کا نور ہے۔

فلسطینی مزاحمتی کمیٹی نے اعلان کیا کہ غاصب صہیونیوں سے نمٹنے اور فلسطینی سرزمین سے ان کے خاتمے کا واحد راستہ مزاحمت ہے۔

آج شہید ہونے والے شہید کے بھائی شاہد "کامل عبدالله علاونه" کو صیہونی فوجیوں نے 2003 میں شہید کیا تھا اور اسی سال اللہ تعالیٰ نے اس خاندان کو ایک اور بچہ عطا کیا جس کا نام کامل تھا جو بھی آج شہید ہو گیا۔
http://www.taghribnews.com/vdcb50bsarhbsgp.kvur.html
آپ کا نام
آپکا ایمیل ایڈریس