تاریخ شائع کریں2022 30 June گھنٹہ 13:56
خبر کا کوڈ : 555628

نابلس میں حضرت یوسف نبی کے مقبرے پر آباد کاروں کے حملے میں 64 فلسطینی زخمی ہو گئے

 صیہونی جنگجوؤں نے فلسطینیوں پر آنسو گیس اور گولہ بارود سے حملہ کیا۔
نابلس میں حضرت یوسف نبی کے مقبرے پر آباد کاروں کے حملے میں 64 فلسطینی زخمی ہو گئے
نابلس میں حضرت یوسف نبی کے مقبرے پر صیہونی عسکریت پسندوں اور انتہا پسند آباد کاروں کے فلسطینیوں کے حملے میں متعدد بچوں سمیت 64 فلسطینی زخمی ہو گئے۔

 صیہونی جنگجوؤں نے فلسطینیوں پر آنسو گیس اور گولہ بارود سے حملہ کیا۔

رپورٹ میں مزید کہا گیا ہے کہ صہیونی ملیشیا نے حضرت یوسف علیہ السلام کے مزار پر حملہ کرنے والے صہیونی آباد کاروں کی حمایت میں فلسطینیوں کے ساتھ جھڑپ کی۔

صہیونی میڈیا نے بھی (جمعرات) صبح سویرے خبر دی ہے کہ مغربی کنارے کے شہر نابلس میں حضرت یوسف علیہ السلام کے مزار پر فائرنگ اور فائرنگ کے نتیجے میں تین آباد کار زخمی ہو گئے ہیں۔

اس انتقامی کارروائی کے بعد صیہونی حکومت کی فوج نے حضرت یوسف علیہ السلام کی قبر کو غاصب آباد کاروں سے خالی کرا لیا اور 3 زخمی آباد کاروں کو علاج کے لیے منتقل کیا۔

خبر رساں ایجنسی نے رپورٹ کیا کہ صیہونی گولیوں کے جواب میں اسرائیلی فوج اور انتہاپسند آباد کاروں کے نابلس اور حضرت یوسف علیہ السلام کے مزار پر دھاوا بولنے کے بعد فلسطینی بندوق برداروں نے تین آباد کاروں پر فائرنگ کی۔

حالیہ ہفتوں میں فلسطینیوں کے خلاف تشدد اور بڑے پیمانے پر جرائم کی لہر کے بعد اسرائیلی فورسز نے منگل کی صبح مغربی کنارے کے الگ الگ علاقوں میں چھ فلسطینیوں کو حراست میں لے لیا۔

پیر کو مغربی کنارے کے الگ الگ علاقوں پر اسرائیلی فوج کے حملے کے دوران دو فلسطینی زخمی اور 18 دیگر کو حراست میں لے لیا گیا۔
http://www.taghribnews.com/vdcaumnma49nmi1.zlk4.html
آپ کا نام
آپکا ایمیل ایڈریس