تاریخ شائع کریں2021 24 September گھنٹہ 21:51
خبر کا کوڈ : 520076

یمن کی مسلح افواج کے ترجمان نے البیضاء صوبے کی مکمل آزادی کی خبر دی ہے

یمن کی مسلح افواج کے ترجمان یحیی السریع نے اسٹراٹیجک صوبے البیضاء کی آزادی کا مکمل اعلان کرتے ہوئے اس صوبے القاعدہ، داعش اور سعودی عرب کے اتحادیوں کے خلاف میزائل اور ڈرون آپریشن کی تفصیلات بیان کی۔
یمن کی مسلح افواج کے ترجمان نے  البیضاء صوبے کی مکمل آزادی کی خبر دی ہے
یمن کی مسلح افواج کے ترجمان نے اسٹراٹیجک اہمیت کے حامل البیضاء صوبے کی مکمل آزادی کی خبر دی ہے۔

یمن کی مسلح افواج کے ترجمان یحیی السریع نے اسٹراٹیجک صوبے البیضاء کی آزادی کا مکمل اعلان کرتے ہوئے اس صوبے القاعدہ، داعش اور سعودی عرب کے اتحادیوں کے خلاف میزائل اور ڈرون آپریشن کی تفصیلات بیان کی۔

انہوں نے یمن کے عوام کو انقلاب کی سالگرہ کی مبارکباد پیش کرتے ہوئے 21 ستمبر کے دن کو آزادی و خودمختاری کی عید کی حیثیت سے یاد کیا۔

المسیرہ چینل نے رپورٹ دی کہ یمن کی مسلح افواج کے ترجمان بریگیڈیر جنرل یحیی السریع کا کہنا تھا کہ فجرالحریہ نامی آپریشن میں سب سے پہلے سعودی عرب کے اتحادی القاعدہ اور داعش کے عناصر کو نشانہ بنایا گیا اور یمنی فوج نے گزشتہ 48 گھنٹے کے دوران الصومعہ، مسورہ اور مکیراس کے کچھ علاقوں کو آزاد کرا لیا جس کی رقبہ 2700 کیلومیٹر مربع ہے۔

ان کا کہنا تھا کہ یمنی فوج اور رضاکار فورس کی پیشرفت کو روکنے اور تکفیری عناصر کو بچانے کے لئے سعودی اتحاد نے 30 سے زائد فضائی حملے کئے جبکہ ہماری میزائل اور ڈرون یونٹ نے اس دوران دشمنوں کے ٹھکانوں پر نشانہ بنانےکے لئے 10 بار حملے کئے۔
http://www.taghribnews.com/vdcjayeimuqe8yz.3lfu.html
آپ کا نام
آپکا ایمیل ایڈریس