تاریخ شائع کریں2021 27 February گھنٹہ 18:22
خبر کا کوڈ : 494643

میانمار کی اقوام متحدہ سے مداخلت کی درخواست

اقوام متحدہ میں میانمار کے سفیر کیو مو تون نے اپنے ملک میں فوجی بغاوت کے خلاف آواز اُٹھاتے ہوئے اپیل کی کہ فوج کے غیر قانونی اقدام کیخلاف کسی بھی طرح کے وسائل کا استعمال کیا جائے گا
اقوام متحدہ میں میانمار کے سفیر کیو مو تون نے اپنے ملک میں فوجی بغاوت کے خلاف آواز اُٹھاتے ہوئے اپیل کی کہ فوج کے غیر قانونی اقدام کیخلاف کسی بھی طرح کے وسائل کا استعمال کیا جائے گا۔

عالمی خبر رساں ادارے کے مطابق اقوام متحدہ میں میانمار کے سفیر کیو مو تون نے اپنے ملک میں فوجی بغاوت کی شدید مذمت کرتے ہوئے اقوام متحدہ سے ایکشن لینے کی اپیل کی ہے کہ جمہوریت کی بحالی کے لیے ہر ممکن کوشش کی جائے۔

کیو مو تون نے مغربی ممالک کی تعریف کرتے ہوئے کہا کہ ہمیں فوجی بغاوت کو فوری طور پر ختم کرنے، بے گناہ لوگوں پر مظالم روکنے، ریاستی اقتدار لوگوں کو لوٹنے اور جمہوریت کی بحالی کے لیے بین الاقوامی برادری سے مزید مضبوط ترین کارروائی کی ضرورت ہے۔

قبل ازیں اقوام متحدہ کے سیکرٹری جنرل انتونیو گوتریس کے میانمار کے لیے خصوصی نمائندے شرنر برگرنر نے اپنے خطاب میں رکن ممالک کو متنبہ کیا تھا کہ کوئی بھی ملک میانمار کی فوجی قیادت کی حمایت نہ کرے بلکہ جمہوریت کی بحالی کے لیے کام کریں۔

واضح رہے کہ میانمار فوج نے نومبر میں ہونے والے انتخابات میں دھاندلی کا الزام عائد کرتے ہوئے فوج نے جمہوری حکومت کا تختہ الٹ کر حکمراں آنگ سان سوچی کو گرفتار کرلیا اور ملک میں ایک سال کے لیے ایمرجنسی نافذ کرکے ملک کا اقتدار سنبھال لیا تھا۔
http://www.taghribnews.com/vdcjxxextuqehmz.3lfu.html
آپ کا نام
آپکا ایمیل ایڈریس