تاریخ شائع کریں2021 23 February گھنٹہ 11:35
خبر کا کوڈ : 494157

23 فروری سے آئی اے ای اے کی سرگرمیوں کو محدود کر دیا جائے گا

اسلامی جمہوریہ ایران کے صدر مملکت کے دفتر کے سربراہ محمود واعظی نے کہا ہے کہ پارلیمنٹ کا قانون 23 فروری سے نافذ ہوگا اور آئی اے ای اے کے معائنہ کاروں کی سرگرمیوں کو محدود کر دیا جائے گا
23 فروری سے آئی اے ای اے کی سرگرمیوں کو محدود کر دیا جائے گا
اسلامی جمہوریہ ایران کے صدر مملکت کے دفتر کے سربراہ محمود واعظی نے کہا ہے کہ پارلیمنٹ کا قانون 23 فروری سے نافذ ہوگا اور آئی اے ای اے کے معائنہ کاروں کی سرگرمیوں کو محدود کر دیا جائے گا۔

محمود الواعظی نے کہا کہ ہم نے واضح الفاظ میں اعلان کر دیا ہے کہ ایڈیشنل پروٹوکول کے بارے میں پارلیمنٹ کا قانون 23 فروری سے نافذ ہوگا۔

محمود واعظی نے پیر کو ایڈیشنل پروٹوکول کے بارے میں کہا کہ ہم نے ایٹمی توانائی کی عالمی ایجنسی کو آگاہ کر دیا ہے کہ ایران میں حکومت اور حکام سبھی متفق ہیں کہ اس قانون پر عمل ہونا چاہئے۔

صدر ڈاکٹر حسن روحانی کے دفتر کے سربراہ کا کہنا تھا کہ ہم نے فریق مقابل کو ایسا کوئی بہانا نہیں دیا جس سے وہ ہم سے یہ مطالبہ کریں کہ ہم قانون کو نافذ نہ کریں۔

ان کا کہنا تھا تھا کہ ہم نے اپنے سارے وعدوں پر عمل کیا کیونکہ ہماری ایٹمی سرگرمیاں پرامن ہیں اور یہی ملک کے حکام کا موقف بھی ہے۔

محمود واعظی کے مطابق ہم ایٹمی اسلحوں کے خواہشمند نہیں ہیں اور سیف گارڈ کے تناظر میں معائنے کو قبول کرتے ہیں۔
http://www.taghribnews.com/vdcjixexauqehvz.3lfu.html
آپ کا نام
آپکا ایمیل ایڈریس