تاریخ شائع کریں2021 19 January گھنٹہ 00:43
خبر کا کوڈ : 490102

امریکی دارالحکومت میں اچانک آگ بھڑک اٹھی۔

کیپٹل ہل میں مکمل لاک ڈاؤن نافذ، نومنتخب صدر کی تقریب حلف برداری کی تیاریاں روک دی گئیں۔
امریکی دارالحکومت میں اچانک آگ بھڑک اٹھی۔
امریکی دارالحکومت میں اچانک آگ بھڑکنے اور  دھواں اٹھنے کے باعث کیپٹل ہل میں مکمل لاک ڈاؤن نافذ کرنا پڑا اور نومنتخب صدر کی تقریب حلف برداری کی ریہرسل بھی معطل کردی گئی۔ 

رپورٹ کے مطابق کیپٹل ہل جہاں دو روز بعد نومنتخب صدر کی تقریب حلف برداری منعقد ہونے والی ہے اس سے کچھ ہی دور اچانک آگ لگ گئی اور دھوئیں کے بادل اٹھتے دکھای دیے۔ اس کے فوری بعد تقریبِ حلف برداری کی تیاریاں روک دی گئیں اور سیکیورٹی الرٹ جاری کردیا گیا جس کے بعد یہ علاقہ مکمل طورپربند کردیا گیا۔

واضح رہے کہ 6 جنوری کو امریکی کانگریس پر ٹرمپ کے حامیوں کے حملے کے بعد واشنگٹن ڈی سمیت امریکا کی 50 ریاستوں میں سیکیورٹی ہائی الرٹ کردی گئی ہے۔ دارالحکومت واشنگٹن میں نومنتخب صدر کی تقریب حلف برداری کو درپیش سیکیورٹی خدشات کے پیش نظر 22 ہزار سے زائد فوجی اہل کار تعینات کیے گئے ہیں۔

کیپٹل ہل میں 6 جنوری کو کانگریس پر ہونے والے حملے میں 5 افراد ہلاک ہوئے تھے۔ اس واقعے کو امریکی تاریخ میں ایک فیصلہ کُن موڑ بھی قرار دیا جارہا ہے اور اس کے بعد صدر ٹرمپ کے خلاف کانگریس سے دوسری بار مؤاخذے کی تحریک بھی منظور کی گئی ہے۔

علاوہ ازیں گذشتہ ہفتے دو ہفتوں کے واقعات کے پیش نظر نومنتخب صدر بائیڈن کی حلف تقریب برداری کے لیے سیکیورٹی کے سخت انتظامات کیے گئے ہیں۔
http://www.taghribnews.com/vdcfxxdj0w6d1ya.k-iw.html
آپ کا نام
آپکا ایمیل ایڈریس