تاریخ شائع کریں۶ آبان ۱۳۹۹ گھنٹہ ۱۷:۴۱
خبر کا کوڈ : 480077

اردوان کی عوام سے فرانسیسی مصنوعات کے بائیکاٹ کی اپیل،

ترک صدر طیب اردوان نے ترکی کے عوام سے فرانسیسی مصنوعات کے بائیکاٹ کی اپیل کردی ہے۔
اردوان کی عوام سے فرانسیسی مصنوعات کے بائیکاٹ کی اپیل،
ترک خبر رساں ادارے کے مطابق انقرہ میں میلاد النبی صلی اللہ علیہ وسلم کی تقریب سے خطاب کرتے ہوئے طیب اردوان نے کہا کہ مسلمانوں کے لیے مغربی ممالک میں اسلامی طرز حیات کے مطابق زندگی گزارنا مشکل ترین ہوتا جارہا ہے۔

انہوں نے کہا کہ ترکی اسلاموفوبیا کو قومی سلامتی کا مسئلہ سمجھتا ہے۔ یورپی یونین کی اولین ذمے داری ہے کہ اسلام کے خلاف منافرت کو روکے، اس معاملے کو اب مزید نظر انداز نہیں کیا جاسکتا۔

ترک صدر نے کہا کہ یورپی رہنماؤں کو یورپ میں نفرت کا پھیلاؤ روکنے کے لیے فرانسیسی صدر کی پالیسیوں کو روکنا چاہیے اور انہیں سمجھانے کی کوشش کرنی چاہیے۔

میلاد النبی ﷺ کی تقریب سے خطاب میں طیب اردوان نے فرانسیسی صدر کے اسلام مخالف بیانات پر فرانسیسی مصنوعات کے بائیکاٹ کی بھی اپیل کی۔

واضح رہے کہ فرانس میں گستاخانہ خاکوں کی اشاعت کے بعد اسلام مخالف تقاریر اور کارروائیوں میں تیزی آگئی ہے۔ فرانسیسی صدر میکرون نے نہ صرف گستاخانہ خاکوں کی تشہیر کی حمایت کی بلکہ اسلام کو بحرانوں کا مذہب اور مسلمانوں کو فرانس میں علیحدگی پسند جذبات کے رجحان کا ذمے دار قرار دیا۔

فرانسیسی صدر میکرون کے بیانات کے بعد فرانس سمیت دنیا بھر کے مسلمانوں میں شدید غم و غصے کی لہردوڑ گئی ہے اور مسلم رہنماؤں میں طیب اردوان نے دو ٹوک مؤقف اختیار کیا ہے۔ اس سے قبل وہ فرانسیسی صدر کو اسلام مخالف بیانات پر دماغی علاج کروانے کا مشورہ بھے دے چکے ہیں۔
http://www.taghribnews.com/vdcfexdjew6dcxa.k-iw.html
آپ کا نام
آپکا ایمیل ایڈریس