تاریخ شائع کریں۱۰ خرداد ۱۳۹۹ گھنٹہ ۱۵:۰۶
خبر کا کوڈ : 464295

اردن کی مغربی کنارے کے اسرائیل میں الحاق کی کھل کر مخالفت

اردن کے وزیر خارجہ نے کہا کہ فلسطین کی سرزمین کے کسی بھی حصے کے اسرائیل میں الحاق کے کسی بھی منصوبے کی ان کا ملک حمایت نہیں کرے گا
اردن کی مغربی کنارے کے اسرائیل میں الحاق کی کھل کر مخالفت
اردن نے بھی مغربی کنارے کے اسرائیل میں الحاق کے منصوبے کی کھل کر مخالفت کی ہے۔

اردن کے وزیر خارجہ نے کہا کہ فلسطین کی سرزمین کے کسی بھی حصے کے اسرائیل میں الحاق کے کسی بھی منصوبے کی ان کا ملک حمایت نہیں کرے گا۔

انہون نے کہا کہ یہ مسئلہ، اردن اور صیہونی حکومت کے درمیان کشیدگی پیدا کر دے گا۔

ایمن الصفدی نے امریکی وزیر خارجہ مائیک پومپئو سے ٹیلیفونی گفتگو میں کہا کہ علاقہ ہی نہیں بلکہ پوری دنیا کے لئے منصفانہ امن بہت ضروری ہے۔

انہوں نے اس ٹیلیفونی گفتگو میں بحران فلسطین کے حل کے لئے دوبارہ مذاکرات شروع کئے جانے کی بات کہی۔ اس سے پہلے شاہ اردن عبد اللہ دوم نے اشپیگل سے گفتگو میں کہا تھا کہ فلسطینی کی سرزمین کا اسرائیل میں الحاق کی وجہ سے صیہونی حکومت کے ساتھ اس کی جنگ شروع ہو جائے گی۔

واضح رہے کہ صیہونی حکومت کی جانب سے اعلان کیا گیا ہے کہ وہ جولائی 2020 سے ویسٹ بینک کے کچھ حصوں کے اسرائیل میں الحاق کا آغاز شروع کرے گا۔
 
آپ کا نام
آپکا ایمیل ایڈریس