تاریخ شائع کریں2020 27 April گھنٹہ 15:49
خبر کا کوڈ : 460442

چین میں تعلیمی اداروں کو کھولنے کا آغاز کردیا گیا

چین میں تعلیمی اداروں کے کھلنے سے قبل ہی گزشتہ ماہ مارچ کے آغاز میں ہی کاروبار زندگی بحال ہونا شروع ہوا تھا اور اب وہاں پر جہاں شاپنگ مالز کھل چکے ہیں، وہیں سینما ہالز اور تفریحی مقامات کو بھی کھول دیا گیا ہے، تاہم وہاں پر بھی مکمل طور پر زندگی بحال نہیں ہوئی۔
چین میں تعلیمی اداروں کو کھولنے کا آغاز کردیا گیا
کورونا وائرس کے مرکز سمجھے جانے والے چین میں 27 اپریل سے تعلیمی اداروں کو کھولنے کا آغاز کردیا گیا جب کہ یورپی ملک اسپین میں بھی 6 ہفتوں بعد بچوں کو باہر جانے کی اجازت دے دی گئی۔

کورونا وائرس کا آغاز دسمبر 2019 میں چین سے ہوا تھا اور وہاں جنوری 2020 میں تمام تعلیمی اداروں کو بھی بند کردیا گیا تھا۔

چین میں 82 ہزار سے زائد افراد کورونا میں مبتلا ہوئے تھے اور وہاں پر اس سے 5 ہزار کے قریب ہلاکتیں بھی ہوچکی ہیں، تاہم 26 اپریل کو کورونا کے مرکز سمجھے جانے والے شہر ووہان کی انتظامیہ نے دعویٰ کیا تھا کہ وہاں کے تمام کورونا کے مریض صحت یاب ہوگئے۔

چین میں گزشتہ چند ہفتوں سے حالات بتدریج معمول پر آ رہے ہیں اور حکومت نے 27 اپریل کو کچھ علاقوں کے تعلیمی اداروں کو کھولنے کی اجازت بھی دی اور تقریبا تین ماہ بعد طالب علموں نے تعلیمی اداروں کا رخ کیا۔


خبر رساں ادارے اے ایف پی کے مطابق شنگھائی اور بیجنگ جیسے بڑے شہروں میں 27 اپریل کو مڈل و ہائی اسکولز سمیت یونیورسٹیز کو کھول دیا گیا اور پہلے ہی دن طالب علموں کا رش دیکھا گیا۔

رپورٹ کے مطابق شنگھائی میں مڈل اور ہائی اسکول جب کہ بیجنگ میں یونیورسٹیز کو کھول دیا گیا۔

تعلیمی اداروں کو کھولے جانے کے بعد طالب علموں اور وہاں کے عملے کو سخت حفاظتی اقدامات اٹھانے کی ہدایت کی گئی ہے اور پہلے ہی دن تمام طلبہ کو فیس ماسک میں دیکھا گیا جب کہ انہوں نے سماجی دوری کے اصولوں کو بھی اپنائے رکھا۔

چین میں تعلیمی اداروں کے کھلنے سے قبل ہی گزشتہ ماہ مارچ کے آغاز میں ہی کاروبار زندگی بحال ہونا شروع ہوا تھا اور اب وہاں پر جہاں شاپنگ مالز کھل چکے ہیں، وہیں سینما ہالز اور تفریحی مقامات کو بھی کھول دیا گیا ہے، تاہم وہاں پر بھی مکمل طور پر زندگی بحال نہیں ہوئی۔
http://www.taghribnews.com/vdcjxyex8uqemxz.3lfu.html
آپ کا نام
آپکا ایمیل ایڈریس