تاریخ شائع کریں۲ اسفند ۱۳۹۸ گھنٹہ ۱۵:۵۶
خبر کا کوڈ : 452271

عبداللہ عبداللہ نے افغانستان کے صدارتی انتخابات کے نتائج کو مسترد کردیا

عبداللہ عبداللہ نے کابل میں متعین غیر ملکی اداروں اور سفارتخانوں سے کہا ہے
افغانستان کی قومی وفاق کی حکومت کے چیف ایگزیکٹیو عبداللہ عبداللہ نے غیر ملکی اداروں اور سفارتخانوں سے کہا ہے کہ وہ افغانستان کے صدارتی انتخابات کے نتائج کو تسلیم نہ کریں
عبداللہ عبداللہ نے افغانستان کے صدارتی انتخابات کے نتائج کو مسترد کردیا
افغانستان کی قومی وفاق کی حکومت کے چیف ایگزیکٹیو عبداللہ عبداللہ نے غیر ملکی اداروں اور سفارتخانوں سے کہا ہے کہ وہ افغانستان کے صدارتی انتخابات کے نتائج کو تسلیم نہ کریں
افغانستان کے چیف ایگزیکٹیو اور صدارتی انتخابات کے امیدوار عبداللہ عبداللہ نے کابل میں متعین غیر ملکی اداروں اور سفارتخانوں سے کہا ہے کہ وہ افغانستان کے صدارتی انتخابات کے تنازعے میں اپنی غیر جانبداری کو برقرار رکھیں اور صدارتی انتخابات کے نتائج کو تسلیم نہ کریں - واضح رہے کہ عبداللہ عبداللہ نے افغانستان کے صدارتی انتخابات کے نتائج کو مسترد کردیا ہے اور کہا ہے کہ وہی ان انتخابات میں کامیاب ہوئے ہیں اور جلد وہ ایک حکومت تشکیل دیں گے - گذشتہ سنیچر کو افغانستان کے الیکشن کمیشن نے صدارتی انتخابات کے نتائج کا اعلان کرتے ہوئے کہا تھا کہ موجودہ صدر اشرف غنی پچاس اعشاریہ چھے چار فیصد ووٹ حاصل کرکے ایک بار پھر ملک کے صدر منتخب ہوگئے ہیں اور عبداللہ عبداللہ دوسرے نمبر پر رہے - انتخابی نتائج کے اعلان کے بعد عبد اللہ عبداللہ نے کہا ہے کہ وہ ان نتائج کو کسی بھی قیمت پر تبدیل کریں گے اور ان کے اس موقف کی افغانستان کی کئی جماعتوں نے بھی حمایت کی ہے - افغانستان کے صدارتی انتخابات گذشتہ برس اٹھائیس ستمبر کو ہوئے تھے -
آپ کا نام
آپکا ایمیل ایڈریس