تاریخ شائع کریں۱۹ آبان ۱۳۹۸ گھنٹہ ۱۷:۰۸
خبر کا کوڈ : 442291

یمنی فورسز اور قبائل نے صوبہ تعز پر آل سعود کے قبضہ کی کوشش ناکام بنادی

یمن پر سعودی اتحاد کی جارحیت کا سلسلہ جاری ہے تاہم یمنی عوام، فورسز اور قبائل بھی جارحین کا مقابلہ کر رہے ہیں۔
سعودی عرب کے کرائے کے فوجی صوبہ تعز میں داخل ہونے کی کوشش کررہے تھے جسے یمنی فورسز اور قبائل نے ناکام بنادیا ہے
یمنی فورسز اور قبائل نے صوبہ تعز پر آل سعود کے قبضہ کی کوشش ناکام بنادی
یمن پر سعودی اتحاد کی جارحیت کا سلسلہ جاری ہے تاہم یمنی عوام، فورسز اور قبائل بھی جارحین کا مقابلہ کر رہے ہیں۔
المسیرہ کی رپورٹ کے مطابق یمنی فورسز اور قبائل نے صوبہ تعز پر سعودی عرب کے کرائے کے فوجیوں کے حملے کو ناکام بنادیا ہے۔
اطلاعات کے مطابق سعودی عرب کے کرائے کے فوجی صوبہ تعز میں داخل ہونے کی کوشش کررہے تھے جسے یمنی فورسز اور قبائل نے ناکام بنادیا ہے۔ عرب ذرائع کے مطابق سعودی آلہ کار یمنی فوج کے اڈے پر مسلط ہونے کی کوشش کررہے تھے۔ یمنی فورسز نے اس کارروائی میں متعدد سعودی فوجیوں کو ہلاک اور زخمی بھی کردیا ہے۔
واضح رہے کہ سعودی عرب نے امریکا اور اسرائیل کی حمایت  سے اور اتحادی ملکوں کے ساتھ مل کر چھبیس مارچ دو ہزار پندرہ سے یمن پر وحشیانہ جارحیتوں کا سلسلہ شروع کر رکھا ہے ۔ اس دوران سعودی حملوں میں دسیوں ہزار یمنی شہری شہید اور زخمی ہوئے ہیں جبکہ دسیوں لاکھ یمنی باشندے اپنے گھر بار چھوڑنے پر مجبور ہوئے ہیں ۔
یمن کا محاصرہ جاری رہنے کی وجہ سے یمنی عوام کو شدید غذائی قلت اور طبی سہولتوں اور دواؤں کے فقدان کا سامنا ہے ۔
 سعودی عرب نے غریب اسلامی ملک یمن کی بیشتر بنیادی تنصیبات اسپتال اور حتی مسجدوں کو بھی منہدم کردیا ہے  لیکن اس کے باوجود سعودی عرب یمن پر مسلط کردہ جنگ میں اپنے اہداف تک پہنچنے میں بری طرح ناکام ہوگیا ہے۔
 
آپ کا نام
آپکا ایمیل ایڈریس