تاریخ شائع کریں۲۰ مهر ۱۳۹۸ گھنٹہ ۱۹:۲۳
خبر کا کوڈ : 439818

انقرہ کے اقدامات کا یورپی یونین کے اجلاس میں جائزہ لیا جائے گا

انقرہ کے خلاف یورپی یونین کی اسلحہ جاتی پابندیوں کی حمایت کی ہے
سوئیڈن کی پارلیمینٹ نے شمالی شام میں ترک فوج کے حملے پر ردعمل ظاہر کرتے ہوئے انقرہ کے خلاف یورپی یونین کی اسلحہ جاتی پابندیوں کی حمایت کی ہے
انقرہ کے اقدامات کا یورپی یونین کے اجلاس میں جائزہ لیا جائے گا
سوئیڈن کی پارلیمینٹ نے شمالی شام میں ترک فوج کے حملے پر ردعمل ظاہر کرتے ہوئے انقرہ کے خلاف یورپی یونین کی اسلحہ جاتی پابندیوں کی حمایت کی ہے۔
رشا ٹوڈے کی رپورٹ کے مطابق سوئیڈن کی پارلیمینٹ نے ایک بیان جاری کر کے ترکی کے خلاف بریسلز کی اسلحہ جاتی پابندیوں کا مطالبہ کیا ہے اور اعلان کیا ہے کہ اس کا یورپی یونین کے اجلاس میں جائزہ لیا جائے گا۔
پروگرام کے مطابق سوئیڈن کی حکومت پیر کو یورپی یونین کے وزرائے خارجہ کے اجلاس میں اس موضوع کا جائزہ لے گی۔
سوئیڈن کی وزیرخارجہ آن لینڈ نے شمالی شام پر ترکی کی فوجی یلغار کی مذمت کی ہے۔ شمالی شام پر ترکی کا فوجی حملہ گذشتہ بدھ سے شروع ہوا ہے۔
شمالی شام میں ترکی کی فوجی کارروائیاں ترک صدر رجب طیب اردوغان اور امریکی صدر ڈونالڈ ٹرمپ کے درمیان ٹیلی فون پر بات چیت کے بعد شروع ہوئی ہیں۔
شمالی شام پر ترکی کے فوجی حملوں کی شام ، عالمی برادری اور یورپی ممالک کی جانب سے سخت مخالفت ہو رہی ہے۔
آپ کا نام
آپکا ایمیل ایڈریس