تاریخ شائع کریں۱ شهريور ۱۳۹۸ گھنٹہ ۱۱:۳۰
خبر کا کوڈ : 434925

حزب الاحرار اور بلوچستان راجی اجوئی آر سنگر (براس) پر پابندی عائد کردی

حزب الاحرار اور بلوچستان راجی اجوئی آر سنگر (براس) پر پابندی عائد کردی
پاکستانی وزارت داخلہ نے 2 مزید تنظیموں کے ناموں کو کالعدم دہشت گرد تنظیموں کی فہرست میں درج کرلیا جبکہ اس فہرست میں اس طرح کی 71 تنظیموں کے نام پہلے ہی درج ہیں
حزب الاحرار اور بلوچستان راجی اجوئی آر سنگر (براس) پر پابندی عائد کردی
پاکستانی وزارت داخلہ نے 2 مزید تنظیموں کے ناموں کو کالعدم دہشت گرد تنظیموں کی فہرست میں درج کرلیا جبکہ اس فہرست میں اس طرح کی 71 تنظیموں کے نام پہلے ہی درج ہیں۔
 پاکستانی میڈیا کی رپورٹ کے مطابق نیشنل کاؤنٹر ٹیررازم اتھارٹی (نیکٹا) نے 2 مزید تنظیموں، حزب الاحرار اور بلوچستان راجی اجوئی آر سنگر (براس) پر پابندی عائد کردی۔
مذکورہ تنظیموں پر پابندی انسداد دہشت گردی ایکٹ کی دفعہ 11- بی کے تحت لگائی گئی اور ان کے اراکین اور سرگرمیوں کی نگرانی کرنے کا آغاز کردیا۔
اس سے قبل رواں برس مارچ میں جماعت الدعوہ اور اس سے منسلک اداروں کو کالعدم قرار دے دیا گیا تھا۔
جس کے بعد وفاقی حکومت کی ہدایات کی روشنی میں سندھ، پنجاب، بلوچستان اور اسلام آباد میں متعلقہ حکومتوں نے کالعدم تنظیم اس تنظیم کے متعدد مدارس اور اداروں کو اپنے زیر انتظام لےلیا یا پھر سیل کردیا تھا۔
اس کے ساتھ جماعت الدعوہ کی ذیلی فلاحی تنظیم فلاح انسانیت فاؤنڈیشن کو مارچ میں جبکہ اس سے منسلک 2 اداروں کو مئی میں کالعدم قرار دیا گیا تھا۔
یاد رہے کہ مارچ میں حکومت نے کالعدم تنظیموں کی درجہ بندی میں اضافہ کرتے ہوئے انہیں ’شدید خطرہ قرار دینے اور فنانشنل ٹاسک فورس (ایف اے ٹی ایف) کے مطالبات کو پورا کرنے کے لیے سخت سیکورٹی کے قانونی، انتظامی، مالی اور تفتیشی پہلوؤں کے تحت تمام افراد اور ان کی حرکات و سکنات کی از سرِ نو جانچ کا فیصلہ کیا تھا۔
آپ کا نام
آپکا ایمیل ایڈریس