تاریخ شائع کریں۲۳ تير ۱۳۹۸ گھنٹہ ۱۵:۲۲
خبر کا کوڈ : 429585

طالبان کے حملے میں افغان فوسرز کے 8 اہلکار ہلاک

طالبان جنگجوؤں کے حملے میں سیکیورٹی فورسز کے ساتھ گھمسان کی جھڑپ میں 8 پولیس اہلکار ہلاک
افغانستان کے صوبے بادغیس کے ہوٹل میں طالبان جنگجوؤں کے حملے میں سیکیورٹی فورسز کے ساتھ گھمسان کی جھڑپ میں 8 پولیس اہلکار ہلاک اور 2 طالبان مارے گئے
طالبان کے حملے میں افغان فوسرز کے 8 اہلکار ہلاک
افغانستان کے صوبے بادغیس کے ہوٹل میں طالبان جنگجوؤں کے حملے میں سیکیورٹی فورسز کے ساتھ گھمسان کی جھڑپ میں 8 پولیس اہلکار ہلاک اور 2 طالبان مارے گئے۔
افغان میڈیا کے مطابق خود کش حملہ آورں کا ایک گروپ بادغیس کے قلعہ نو میں داخل ہوا اور ہوٹل کو دھماکے سے اُڑانے کی دھمکی دی تاہم وہاں موجود پولیس اہلکاروں نے حملہ آوروں پر فائرنگ کردی جس کے نتیجے میں دو خود کش بمبار دھماکا کرنے سے قبل ہی ہلاک ہوگئے۔
ہوٹل میں موجود دیگر طالبان نے ساتھی خود کش بمبار کی ہلاکت کے بعد پوزیشن سنبھال لیں اور پولیس کے 8 اہلکاروں کو ہلاک اور 7 کو زخمی کر کے ہوٹل پر قابض ہوگئے تاہم افغان فوج نے ہوٹل میں کارروائی کرکے ہوٹل کو واگزار کروالیا۔
طالبان کی جانب سے حملے کی ذمہ داری قبول کرلی گئی ہے تاہم ترجمان طالبان کا دعویٰ ہے کہ حملہ بادغیس کے پولیس ہیڈ کوارٹر پر کیا گیا ہے جس میں افغان پولیس کو بڑے پیمانے پر جانی و مالی نقصان پہنچایا گیا۔
واضح رہے کہ امریکا اور افغان طالبان کے درمیان امن مذاکرات کا سلسلہ چین تک جا پہنچا ہے جہاں فریقین 11 سالہ جنگ کے خاتمے کے لیے روٹ میپ کے تعین کے لیے اتفاق رائے پیدا کرنے کی کوششں کررہے ہیں۔
آپ کا نام
آپکا ایمیل ایڈریس