تاریخ شائع کریں۲۰ تير ۱۳۹۸ گھنٹہ ۱:۲۳
خبر کا کوڈ : 429093

امریکہ تائیوان کو اسلحہ کی فروخت بند کرے

بیجنگ نے واشنگٹن سے مطالبہ کیا ہے کہ تائیوان کو اسلحہ بیچنے کے معاہدے کو فوراً منسوخ کیا جائے
امریکا اور چین میں نیا تنازعہ شدت اختیار کر گیا ہے جس کے بعد بیجنگ نے واشنگٹن سے کہا ہے کہ تائیوان کو اسلحہ بیچنے کے معاہدے کو فوراً منسوخ کیا جائے۔
امریکہ تائیوان کو اسلحہ کی فروخت بند کرے
بیجنگ نے واشنگٹن سے مطالبہ کیا ہے کہ تائیوان کو اسلحہ بیچنے کے معاہدے کو فوراً منسوخ کیا جائے۔
غیر ملکی خبر رساں ادارے کے مطابق امریکا اور چین میں نیا تنازعہ شدت اختیار کر گیا ہے جس کے بعد بیجنگ نے واشنگٹن سے کہا ہے کہ تائیوان کو اسلحہ بیچنے کے معاہدے کو فوراً منسوخ کیا جائے۔
چین نے امریکا سے مطالبہ کیا ہے کہ تائیوان کو 2.2 ارب ڈالر کے اسلحہ کے فروخت کی ڈیل فورا منسوخ کی جائے۔
ترجمان چینی وزارت خارجہ جنگ شوینگ کا کہنا ہے کہ اسلحہ بیچنے کے معاہدے میں ٹینک اور طیارہ شکن میزائل بھی شامل ہیں۔
ترجمان چینی وزارت خارجہ کا کہنا تھا کہ امریکا کا تائیوان کو اسلحہ بیچنا چین کی خود مختاری پر حملہ ہے۔ کوئی ہمیں نیچا نہیں دکھا سکتا، ہم اپنی خود مختاری کا تحفظ کرنا جانتے ہیں۔
یاد رہے کہ تائیوان اور امریکہ کے درمیان ہونے والی اسلحہ ڈیل میں واشنگٹن تائیوان کو 108 کے قریب البم ٹینک اور 250 کے قریب سٹینگر پورٹ ایبل اینٹی کرافٹ میزائل دے گا۔
آپ کا نام
آپکا ایمیل ایڈریس