تاریخ شائع کریں۲۷ خرداد ۱۳۹۸ گھنٹہ ۲۲:۴۱
خبر کا کوڈ : 425437

ایران یورینیم کی مقدار میں 300 کلو گرام اضافہ کرلے گا

اسلامی جمہوریہ ایران کے جوہری ادارے کے ترجمان بہروز کمالوندی نے کہا
اسلامی جمہوریہ ایران کے جوہری ادارے کے ترجمان نے کہا ہے کہ ایران 27 جون کو یورینیم افزودگی کی 300 کلو گرام کی حد سے گزر جائے گا۔
ایران یورینیم کی مقدار میں 300 کلو گرام اضافہ کرلے گا
اسلامی جمہوریہ ایران کے جوہری ادارے کے ترجمان نے کہا ہے کہ ایران 27 جون کو یورینیم افزودگی کی 300 کلو گرام کی حد سے گزر جائے گا۔
مہر خبررساں ایجنسی کے نامہ نگار کی رپورٹ کے مطابق اسلامی جمہوریہ ایران کے جوہری ادارے کے ترجمان بہروز کمالوندی نے کہا ہے کہ ایران 27 جون کو یورینیم افزودگی کی 300 کلو گرام کی حد سے گزر جائے گا۔
اطلاعات کے مطابق اراک میں صحافیوں سے گفتگو کرتے ہوئے ایرانی جوہری ادارے کے ترجمان نے کہا کہ ایران نے یورینیم کی پیداوار میں تھوڑا اضافہ اور یورینیم کو کم درجہ میں 67 ۔ 3 فیصد سے مزید بڑھانے کا فیصلہ کیا ہے۔
انھوں نے کہا کہ ہمارا معاہدہ 130 ٹن یورینیم کی حد تک نہیں ہے اس کے بعد ایران نے سنگین پانی کو صادر کرنے کے بجائے دوسری صنعتوں میں استفادہ کرنے کا فیصلہ کیا ہے۔ سنگين پانی کی عالمی سطح پر بڑی قدر و قیمت ہے۔
انھوں نے کہا کہ ابھی یورپی ممالک کے پاس اپنے وعدوں پر عمل کرنے کے لئے وقت باقی ہے۔ ایران کی طرف سے یورپی ممالک کو مقررہ وقت سے زیادہ مہلت نہیں دی جائےگی۔
کمالوندی نے کہا کہ ایٹمی صنعت کا ملک کے اقتصادی رشد میں اہم کردار ہے اور ایران کسی کو ایٹمی صنعت تباہ کرنے کی اجازت نہیں دےگا۔ پر امن ایٹمی ٹیکنالوجی کا حصول ایران کا مسلّم حق ہے ۔
آپ کا نام
آپکا ایمیل ایڈریس