تاریخ شائع کریں۲۴ ارديبهشت ۱۳۹۸ گھنٹہ ۱۸:۳۸
خبر کا کوڈ : 420103

ٹرمپ کی سب سے بڑی غلطی ایٹمی معاہدے سے علیحدگی ہے

روس کی جیو پولیٹیکل اکیڈمی کے سربراہ لیئونیڈ ایواشیف نے پیر کو ماسکو میں کہا
روس کی جیو پولیٹیکل اکیڈمی کے سربراہ نے کہا ہے کہ امریکی صدر کے غیر سنجیدہ اور بین الاقوامی قوانین کے منافی اقدامات نے مشرق وسطی کو خطرات سے دوچار کردیا ہے
ٹرمپ کی سب سے بڑی غلطی ایٹمی معاہدے سے علیحدگی ہے
روس کی جیو پولیٹیکل اکیڈمی کے سربراہ نے کہا ہے کہ امریکی صدر کے غیر سنجیدہ اور بین الاقوامی قوانین کے منافی اقدامات نے مشرق وسطی کو خطرات سے دوچار کردیا ہے
روس کی جیو پولیٹیکل اکیڈمی کے سربراہ لیئونیڈ ایواشیف نے پیر کو ماسکو میں کہا کہ امریکی صدر ٹرمپ نے یہ ثابت کردیا ہے کہ وہ اپنے اقدامات کے نتائج کا کبھی بھی انداز نہیں لگاتے - مذکورہ روسی عہدیدار نے کہا کہ ٹرمپ کی سب سے بڑی غلطی ایٹمی معاہدے سے علیحدگی تھی چنانچہ اس کی وجہ سے آج امریکا اپنے اتحادیوں کے درمیان بھی الگ تھلگ پڑگیا ہے ۔ روس کی جیو پولیٹیکل اکیڈمی کے سربراہ نے کہا کہ آج کوئی بھی ملک وائٹ ہاؤس کی مہم جوئیوں میں اس کا ساتھ دینے کے لئے تیار نہیں ہے - ایواشف نے اس بات کا ذکرکرتے ہوئے کہ صرف سعودی عرب ، متحدہ عرب اور اسرائیل ہی مشرق وسطی کے بارے میں ٹرمپ کے اقدامات کی حمایت کررہے ہیں کہاکہ ٹرمپ کے اقدامات مشرق وسطی کے لئے خطرناک ہیں 
آپ کا نام
آپکا ایمیل ایڈریس