تاریخ شائع کریں۲۲ بهمن ۱۳۹۷ گھنٹہ ۱۹:۱۷
خبر کا کوڈ : 401732

امریکی فوج کو عراق میں کسی بھی صورت میں نہیں رہنا چـاہئے

ایک بیان میں کہا کہ امریکی فوج کو عراق میں کسی بھی صورت میں نہیں رہنا چـاہئے
عراق کے الفتح پارلیمانی گروپ کے سربراہ ہادی العامری نے مشرقی صوبے دیالہ میں اپنے ایک بیان میں کہا کہ امریکی فوج کو عراق میں کسی بھی صورت میں نہیں رہنا چـاہئے
امریکی فوج کو عراق میں کسی بھی صورت میں نہیں رہنا چـاہئے
عراق میں الفتح پارلیمانی گروپ کے سربراہ ہادی العامری نے ایک بار پھر عراق سے امریکی فوج کے انخلا کا مطالبہ کیا ہے۔

عراق کے الفتح  پارلیمانی گروپ  کے سربراہ ہادی العامری نے مشرقی صوبے دیالہ میں اپنے ایک بیان میں کہا کہ امریکی فوج کو عراق میں کسی بھی صورت میں نہیں رہنا چـاہئے۔
انہوں نے کہا کہ ہم عراق میں نہ تو امریکا کی زمینی فوج کو دیکھنا چاہتے ہیں اور نہ ہی اس کے کسی ائیر بیس کو برداشت کریں گے۔ انہوں نے عراق میں موجود امریکی فوجیوں کو بزدل بتایا اور کہا کہ عراقی پارلیمنٹ کی یہ ذمہ داری ہے کہ وہ عراق میں امریکی فوج کی موجودگی کو ختم کرے۔  ہادی العامری اس سے پہلے بھی عراق سے امریکی فوج کے انخلا کا مطالبہ کرچکے ہیں۔
امریکی فوج جو دوہزار گیارہ میں مسلسل ناکامیوں کے بعد عراق سے نکلنے کے بعد مجبور ہوگئی تھی دوہزار چودہ میں داعش کے خلاف جنگ بہانے دوبارہ ایک فوجی اتحاد کی شکل میں عراق میں داخل ہوگئی - ان دنوں عراق میں امریکی فوج کی موجودگی کے سوال پر وسیع پیمانے پر سیاسی بحث چھڑگئی ہے۔
آپ کا نام
آپکا ایمیل ایڈریس