تاریخ شائع کریں۱۳ اسفند ۱۳۹۶ گھنٹہ ۱۳:۱۲
خبر کا کوڈ : 315936

امریکا کی شمال مشرقی ریاستوں میں طوفان نے تباہی مچادی

نیویارک کے شمال اور مغربی علاقوں میں طوفان کے شروع ہوتے ہی ایک فٹ برف جمع ہوگئی
امریکی محکمہ موسمیات کے مطابق طوفان کی رفتار 90 کلومیٹر فی گھنٹہ تھی۔ طوفانی ہواؤں کے ساتھ موسلا دھار بارش اور برفباری ہورہی ہے جس کے باعث ہزاروں پروازیں منسوخ کردی گئی ہیں۔ تیز ہواؤں سے درختوں کے گرنے کے درجنوں واقعات میں متعدد افراد ہلاک ہوگئے
امریکا کی شمال مشرقی ریاستوں میں طوفان نے تباہی مچادی
امریکا کی شمال مشرقی ریاستوں میں طوفان نے تباہی مچادی ہے اور اب تک 8 افراد ہلاک جب کہ لاکھوں گھر بجلی سے محروم ہوگئے ہیں۔

غیرملکی خبر رساں ادارے کے مطابق امریکا کی شمال مشرقی اور وسط مغربی علاقوں میں آنے والے طوفان نے معمولات زندگی درہم برہم کردیے ہیں ۔ طوفان کو ’بم‘ کا نام دیا گیا ہے جس سے اب تک 8 افراد ہلاک ہوچکے ہیں جبکہ 9 لاکھ گھر اور دفاتر بجلی سے محروم ہیں۔

امریکی محکمہ موسمیات کے مطابق طوفان کی رفتار 90 کلومیٹر فی گھنٹہ تھی۔ طوفانی ہواؤں کے ساتھ موسلا دھار بارش اور برفباری ہورہی ہے جس کے باعث ہزاروں پروازیں منسوخ کردی گئی ہیں۔ تیز ہواؤں سے درختوں کے گرنے کے درجنوں واقعات میں متعدد افراد ہلاک ہوگئے جبکہ زمینی راستے بھی منقطع ہوگئے۔ خراب موسم کی وجہ سے واشنگٹن میں وفاقی حکومت کے دفاتر بھی بند کردیئے گئے ہیں اور ساحلی علاقوں نیوجرسی سے میساچیوسٹس تک وارننگ جاری کردی گئی ہے۔

محکمہ موسمیات کے مطابق نیویارک کے شمال اور مغربی علاقوں میں طوفان کے شروع ہوتے ہی ایک فٹ برف جمع ہوگئی اور ساحلی علاقوں میں موسلادھار بارش ہوئی جس کا سلسلہ ایک ہفتے تک جاری رہنے کا امکان ہے۔ امریکا کے سب سے زیادہ آبادی والے شہر نیویارک کے گورنر اینڈریو کومو نے 70 میل فی گھنٹہ کی رفتار سے آندھی اور طوفانی ہواؤں کا خدشہ ظاہر کیا ہے۔ کسی بھی ناگہانی آفت کے پیش نظر شمال مشرقی سے وسطی اوقیانوس کے عوام کو بھی وارننگ جاری کی گئی ہے۔
آپ کا نام
آپکا ایمیل ایڈریس