جوہری معاہدے کی بقاء کے لیے فریقین معاہدے پر عمل درآمد کرے

وزیر خارجہ کے معاون خصوصی اور اعلی ایرانی سفارتکار سید عباس عراقچی نے کہا
سید عباس عراقچی نے کہا کہ اگر یورپ اور دوسرے فریق جوہری معاہدے پر دباؤ کا مقابلہ کرنے میں ناکام رہیں تو اس معاہدے کا مستقبل خطرے میں پڑجائے گا۔
تاریخ شائع کریں : پنجشنبه ۸ آذر ۱۳۹۷ گھنٹہ ۱۳:۲۶
موضوع نمبر: 381610
 
اعلی ایرانی سفارتکار نے کہا ہے کہ جوہری معاہدے کا مستقبل یورپ کی جانب سے وعدوں پر مکمل عمل درآمد کرنے پر منحصر ہے بہ صورت دیگر جوہری معاہدہ خطرے میں پڑجائے گا.

اسلامی جمہوریہ ایران کے وزیر خارجہ کے معاون خصوصی اور اعلی ایرانی سفارتکار سید عباس عراقچی نے گزشتہ دنوں برسلز کے دورے کے موقع پر بیلجیم کے نائب وزیر خارجہ «برونو وانڈر پلویم» Bruno Wonder Plovimکے ساتھ ایک ملاقات میں  ایران بیلجیم تعلقات، تازہ ترین علاقائی صورتحال اور مختلف عالمی امور پر تبادلہ خیال کیا۔

سید عباس عراقچی نے کہا کہ اگر یورپ اور دوسرے فریق جوہری معاہدے پر دباؤ کا مقابلہ کرنے میں ناکام رہیں تو اس معاہدے کا مستقبل خطرے میں پڑجائے گا۔

انہوں نے یورپ اور دیگر فریقین سے مطالبہ کیا کہ وہ ایران کے معاشی مفادات کے حصول کے لئے جلد ایک موثر نظام کو بروئے کار لائیں۔

اس ملاقات میں بیلجیم کے نائب وزیر خارجہ نے کہا کہ ایران جوہری معاہدہ عالمی امن و سلامتی کے لئے اہم ہے.انہوں نے مزید کہا کہ یورپی یونین بشمول بیلجیم کی جانب سے ایران جوہری معاہدے کی حمایت جاری رہے گی.
Share/Save/Bookmark