فلسطینی کے خلاف سعودی عرب کا اسرائیل سےبھر پور تعاون

تعلقات معمول پر لانے کی کوششوں کے بارے میں سخت خبردار کیا
فلسطینی کاز کو نابود ہونے سے بچانے اور ناپاک امریکی منصوبے سینچری ڈیل کے مقابلے میں بھرپور تعاون کی ضرورت پر زور دیا گیا ہے
تاریخ شائع کریں : جمعه ۱۱ آبان ۱۳۹۷ گھنٹہ ۲۰:۲۷
موضوع نمبر: 373753
 
اسلامی مزاحمتی تحریک حماس اور جہاد اسلامی نے اسرائیل کے ساتھ عرب ملکوں کے تعلقات معمول پر لانے کی کوششوں کے بارے میں سخت خبردار کیا ہے۔

حماس اور جہاد اسلامی کے جاری کردہ مشترکہ بیان میں فلسطینی کاز کو نابود ہونے سے بچانے اور ناپاک امریکی منصوبے سینچری ڈیل کے مقابلے میں بھرپور تعاون کی ضرورت پر زور دیا گیا ہے۔فلسطینی تنظیموں کے مشترکہ بیان میں آیا ہے کہ تحریک مزاحمت کی حمایت، مشترکہ آپریشن روم کو فعال بنانا اور اس کا دائرہ وسیع کرنا حماس اور جہاد اسلامی کا مشترکہ ایجنڈا ہے۔حماس اور جہاد اسلامی فلسطین کے مشترکہ بیان میں کہا گیا ہے کہ اہداف کی تکمیل تک پرامن حق واپسی مارچ کا سلسلہ بھی پوری قوت کے ساتھ جاری رہے گا۔اس رپورٹ کے مطابق حماس اور جہاد اسلامی کے اعلی عہدیداروں نے جمعرات کے روز غزہ میں ایک دوسرے سے ملاقات اور ناپاک سینچری ڈیل منصوبے کے خلاف مشترکہ حمکت عملی کی تیاری کے بارے میں تبادلہ خیال کیا ہے۔
Share/Save/Bookmark