اربعین حسینی پر نائجیریا میں 150 شہید و زخمی

نائجیریا کی اسلامی تحریک کے ترجمان نے کہا ہے
نائجیریا کی فوج اور پولیس کی جانب سے اربعین کے دن حسینی زائرین پر ہونے والے وحشیانہ حملہ کے نتیجے میں شہید اور زخمی ہونے والے عزاداروں کی تعداد 150 تک پہنچ گئی ہے۔
تاریخ شائع کریں : پنجشنبه ۱۰ آبان ۱۳۹۷ گھنٹہ ۱۹:۲۴
موضوع نمبر: 373578
 
نائجیریا کی اسلامی تحریک کے ترجمان نے کہا ہے کہ نائجیریا کی فوج اور پولیس کی جانب سے اربعین کے دن حسینی زائرین پر ہونے والے وحشیانہ حملہ کے نتیجے میں شہید اور زخمی ہونے والے عزاداروں کی تعداد 150 تک پہنچ گئی ہے۔

بین الاقوامی خبررساں ایجنسی نے یو نیوز کے حوالے سے نقل کیا ہے کہ نائجیریا کی اسلامی تحریک کے ترجمان نے کہا ہے کہ نائجیریا کی فوج اور پولیس کی جانب سے اربعین کے دن حسینی زائرین پر ہونے والے وحشیانہ حملہ کے نتیجے میں شہید اور زخمی ہونے والے عزاداروں کی تعداد 150 تک پہنچ گئی ہے۔

نائجیریا کی اسلامی تحریک کے ترجمان نے کہا کہ نائجیریا کی فوج نے 6 عزاداروں کو سنیچر کے دن شہید کیا، 21 عزاداروں کو اتوار کے دن وحشیانہ  فائرنگ کے ذریعہ شہید کیا جبکہ باقی شہداء کو پیر اور منگل کے دن  شہید کیا ہے۔

ذرائع کے مطابق تین سال قبل نائجیریا کی فوج نے حسینی عزاداروں پر حملہ کرکے 2 ہزار عزادارون کو شہید اور زخمی کیا جبکہ نائجیریا کے شیعہ مسلمانوں کے رہنما شیخ زکزاکی کو زخمی حالت میں نامعلوم مقام پر منتقل کرکے آج تک نظر بند رکھا ہوا ہے۔ باخبر ذرائع کے مطابق نائجیریا کے شیعہ مسلمانوں پر نائجیریا کی فوج کے حملے کے پيچھے میں اسرائیلی اور سعودی عرب کی مشترکہ سازش کارفرما ہے۔
Share/Save/Bookmark