ایران 12 منٹ سے کم میں مشرق وسطی کے دفاع کی صلاحیت رکھتا ہے

سپاہ پاسداران انقلاب اسلامی کے کمانڈر نے کہا ہے
ایران اپنی سلامتی کو خطرے میں دیکھے تو وہ ان خطرات کا سرحدوں سے باہر جواب دینے کے لئے ہرگز سمجھوتہ نہیں کرے گا.
تاریخ شائع کریں : جمعه ۲۰ مهر ۱۳۹۷ گھنٹہ ۱۱:۴۸
موضوع نمبر: 367591
 
سپاہ پاسداران انقلاب اسلامی کے کمانڈر نے کہا ہے کہ شام اور عراق کی جنگ کے بعد مزاحمتی محاذ مزید طاقتور ہوا ہے اور مزاحمتی محاذ کے حوالے سے کسی بھی طور پریشان ہونے کی ضرورت نہیں ہے۔

 ایران کی سپاہ پاسداران انقلاب اسلامی کے کمانڈر میجر جنرل محمد علی جعفری نے یمنی نیوز چینل المسیرہ کو انٹریو دیتے ہوئے کہا کہ امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ کا یہ خیال کہ ان کے بر سر اقتدار آنے کے بعد ایران کمزور ہوا ہے، غلط ہے۔

میجر جنرل محمد علی جعفری نےکہا کہ ٹرمپ کے بقول اگر ماضی میں ایران 12 منٹ میں مشرق وسطی کے دفاع کی صلاحیت رکھتا تھا آج اس مدت میں مزید کمی آئی ہے۔

انہوں نے خبردار کیا کہ اگر ایران اپنی سلامتی کو خطرے میں دیکھے تو وہ ان خطرات کا سرحدوں سے باہر جواب دینے کے لئے ہرگز سمجھوتہ نہیں کرے گا.

 ایران کی سپاہ پاسداران انقلاب اسلامی کے کمانڈر نےامریکی پابندیوں سے متعلق کہا کہ یہ پابندیاں معمول کی بات ہیں اور ہم اس کے عادی ہیں. اور ایران قدس کی غاصب اور جابر صیہونی حکومت کی مکمل نابودی تک جو بہت قریب ہے اپنی جدوجہد جاری رکھے گا۔
Share/Save/Bookmark