جام کمال خان اور ایرانی سفیر مہدی ہنر دوست کی ملاقات

وزیراعلیٰ بلوچستان جام کمال خان اور ایرانی سفیر مہدی ہنر دوست کے درمیان ملاققات
ملاقات میں زائرین کو تحفظ اور سہولیات کی فراہمی، مشترکہ سرحد کے مزید 2 مقامات پر آمدورفت کی سہولیات کی فراہمی اور گوادر چاہ بہار کے درمیان ریلوے سروس کے آغاز سے متعلق امور پر بھی بات چیت ہوئی۔
تاریخ شائع کریں : پنجشنبه ۱۲ مهر ۱۳۹۷ گھنٹہ ۱۱:۱۰
موضوع نمبر: 364917
 
وزیراعلیٰ بلوچستان جام کمال خان اور ایرانی سفیر مہدی ہنر دوست کے درمیان ہونے والی ملاقات میں دونوں ممالک بالخصوص بلوچستان اور سیستان بلوچستان کے مابین اقتصادی، تجارتی اور ثقافتی تعلقات کے فروغ پر تبادلہ خیال کیا گیا۔

اسلامی جمہوریہ ایران کے سفیرمہدی ہنر دوست اور وزیراعلیٰ بلوچستان جام کمال خان کے درمیان ہونے والی ملاقات میں دونوں ممالک بالخصوص بلوچستان اور سیستان بلوچستان کے مابین اقتصادی، تجارتی اور ثقافتی تعلقات کے فروغ پر تبادلہ خیال کیا گیا۔

ملاقات میں زائرین کو تحفظ اور سہولیات کی فراہمی، مشترکہ سرحد کے مزید 2 مقامات پر آمدورفت کی سہولیات کی فراہمی اور گوادر چاہ بہار کے درمیان ریلوے سروس کے آغاز سے متعلق امور پر بھی بات چیت ہوئی۔

اس موقع پر وزیر اعلیٰ بلوچستان کا کہنا تھا کہ ایران بین الاقوامی تجارتی پابندیوں کا استقامت سے مقابلہ کرتے ہوئے ترقی کی منازل طے کررہا ہے۔

انہوں نے کہا کہ پاکستان، ایران اور افغانستان پر مشتمل خطہ توانائی کے وسائل اور معدنیات سے مالا مال ہے۔

وزیراعلیٰ بلوچستان جام کمال خان کا کہنا تھا کہ تینوں ممالک توانائی اور معدنیات کے شعبے میں مشترکہ کام کرکے بین الاقوامی مارکیٹ پر اثرانداز ہوسکتے ہیں۔

اس موقع پر ایرانی سفیر مہدی ہنر دوست کا کہنا تھا کہ گذشتہ 2 برسوں کے دوران پاکستان اور ایران کا تجارتی حجم بڑھ کر 1.3 ارب ڈالر تک پہنچ چکا ہے جس میں آئندہ برسوں میں مزید اضافہ ہوگا۔

 انہوں نے کہا کہ ایرانی قیادت پاکستان کے ساتھ تعلقات کو بہت زیادہ اہمیت دیتی ہے اور باہمی تعلقات کے فروغ کے لیے تمام چینلز بروئے کار لانا چاہتی ہے۔

ایرانی سفیر کا کہنا تھا کہ ان کی حکومت پاک-ایران گیس پائپ لائن کے منصوبے کی جلد تکمیل کی خواہشمند ہے۔

انہوں نے بتایا کہ رواں ماہ دونوں ممالک کی سرحدی تجارتی کمیٹی کا اجلاس منعقد ہوگا۔
Share/Save/Bookmark