اقوام متحدہ کے خصوصی مشیر کا روہنگیا پناہگزین کیمپ کا دورہ

روہنگیا مسلمانوں کے خلاف تازہ حملوں کا سلسلہ گزشتہ سال اگست کے آخر میں شروع ہوا
اقوام متحدہ : حکومت میانمار صوبہ راخین میں ایک بار پھر روہنگیا مسلمانوں کی نسل کا کشی کا اردہ رکھتی ہے۔
تاریخ شائع کریں : پنجشنبه ۲۴ اسفند ۱۳۹۶ گھنٹہ ۰۱:۲۳
موضوع نمبر: 318344
 
اقوام متحدہ کے سیکریٹری جنرل کے خصوصی مشیر نے کہا ہے کہ حکومت میانمار صوبہ راخین میں ایک بار پھر روہنگیا مسلمانوں کی نسل کا کشی کا اردہ رکھتی ہے۔

نسل کشی کی روک تھام کے لیے اقوام متحدہ کے سیکریٹری جنرل کے خصوصی مشیر ایڈاما ڈینگ نے کا کہنا ہے کہ موصولہ اطلاعات سے اس بات کی نشاندھی ہوتی ہے کہ حکومت میانمار صوبہ راخین سے مسلمانوں کا مکمل صفایا کرنے کی فکر میں ہے۔

انہوں نے کہا کہ اگر یہ اطلاعات صحیح ثابت ہوئیں تو حکومت میانمار کے اقدامات جنگی جرم اور نسلی کشی کے مترداف ہوں گے۔ ایڈاما ڈینگ نے حال ہی میں بنگلہ دیش کے کاکس بازار میں قائم روہنگیا پناہگزین کیمپ کا دورہ کیا ہے۔

انہوں نے کہا کہ جو کچھ انہوں نے پناہگزینوں کی زبانی سنا اور دیکھا ہے اس میں حکومت میانمار اور عالمی اداروں کا ہاتھ نظر آتا ہے۔

روہنگیا مسلمانوں کے خلاف تازہ حملوں کا سلسلہ گزشتہ سال اگست کے آخر میں شروع ہوا ہے جس کے دوران چھے ہزار سے زائد روہنگیا مسلمان مارے جاچکے ہیں۔
Share/Save/Bookmark