ایران کے میزائیل پروگرام کے بارے میں کسی کو فکر مند ہونے کی ضرورت نہیں

ایران میں خواتین اعلی عہدوں پر فائز ہیں اور اپنی سماجی اور مذہبی ذمہ داریاں ادا کر رہی ہیں
تاریخ شائع کریں : چهارشنبه ۱۶ اسفند ۱۳۹۶ گھنٹہ ۱۴:۱۴
موضوع نمبر: 316682
 
 اسلامی جمہوریہ ایران کے صدر حسن روحانی نے کابینہ کے اجلاس سے خطاب کرتے ہوئے کہا ہے کہ ایران کا میزائل پروگرام صرف دفاعی نوعیت کا ہے اور کسی بھی ملک کو ایران کے میزائلوں کے بارے میں فکر مند نہیں ہونا چاہیے۔ دوسروں کو بھی مضبوط بنائیں گے۔

صدر حسن روحانی نے کہا کہ اسلامی قوانین میں اللہ تعالی نے مرد اور عورت دونوں کو عزت اور عظمت عطا کی ہے اور دونوں کو اپنی ذمہ داریوں کے بارے میں اللہ تعالی کی بارگاہ میں جواب دینا ہوگا۔ صدر حسن روحانی نے کہا کہ اسلام میں برتری کا معیار جنسیت نہیں بلکہ عمل صالح اور تقوی ہے جو سب سے زیادہ متقی اور پرہیزگار ہوگا وہی اللہ تعالی کی بارگاہ میں کامیاب ہوگا چاہے وہ مرد ہو یا عورت ہو۔

  انہوں نے اسلامی انقلاب کی کامیابی کے بعد ایران کے مختلف عہدوں اور سماجی شعبوں میں ایرانی خواتین کی بھر پور شرکت کی طرف اشارہ کرتے ہوئے کہا کہ آج ایران میں اکثر خواتین اعلی عہدوں پر فائز ہیں اور اپنی سماجی ، معاشرتی اور سیاسی ذمہ داریوں کو ادا کررہی ہیں۔ صدر حسن روحانی نے کہا کہ ہم سب اللہ تعالی کے بندے ہیں اور ہمیں اپنی سماجی، سیاسی اور دینی ذمہ داریوں پر عمل کرنا چاہیے۔

صدر حسن روحانی نے کہا کہ ایران کا عالمی برادری کے ساتھ جس طرح سیاسی، ثقافتی، اقتصادی اور سماجی شعبوں میں تعاون جاری ہے اسی طرح ایران کا فوجی شعبے میں تعاون جاری رہےگا ۔ ایران کی دفاعی قدرت اور طاقت سے کسی کو پریشان ہونے کی ضرورت نہیں ، کیونکہ ایران کے ہتھیار کسی کے خلاف نہیں بلکہ اپنے ملکی اور قومی دفاع کے سلسلے میں ہیں اور قومی و ملکی دفاع ہر ملک کا بنیادی حق ہے۔
Share/Save/Bookmark