عفرین میں شاخہ زیتون آپریشن کے چالیس دن مکمل

اس آپریشن میں مارے جانے والے کردوں کی تعداد دو ہزار ایک سو چوراسی ہوگئی
عفرین میں صحت عامہ سے متعلق اداروں کی رپورٹ کے مطابق ترک فوجوں کے حملوں میں اب تک عفرین میں ۱۹۲ نہتے شہری بھی مارے گئے ہیں جبکہ ۵۷۴ دیگر عام شہری زخمی ہیں جن میں خواتین اور بچے بھی شامل ہیں
تاریخ شائع کریں : پنجشنبه ۱۰ اسفند ۱۳۹۶ گھنٹہ ۱۵:۰۲
موضوع نمبر: 315357
 
"شاخہ زیتون" آپریشن کے چالیس دن مکمل ہونے پر ترکی نے اعلان کیا ہے کہ اس آپریشن میں مارے جانے والے کردوں کی تعداد دو ہزار سے زائد ہے۔

تقریب خبر رساں ایجنسی کے مطابق " شاخہ زیتون" آپریشن کے چالیس دن مکمل ہونے پر ترکی کی فوج نے اعلان کیا ہے کہ اس آپریشن میں مارے جانے والے کردوں کی تعداد دو ہزار ایک سو چوراسی ہوگئی ہے۔

ترک مسلح افواج نے ایک بیانیہ جاری کرتے ہوئے اطلاع دی ہے کہ گذشتہ رات ایک فضائی حملے میں کرد پیشمرگہ فورس کے سو کارکن مارے گئے جن کے بعد اس پورے آپریشن میں مارے جانے والے کردوں کی تعداد دو ہزار ایک سو چوراسی ہو گئی ہے۔

ترکی کے معروف اخبار آناتولی کے مطابق ترک فوجوں نے اپنے ہم پیمان گروہ سیرین لبریشن آرمی کی مدد سے عفرین کے شمال مغربی علاقے میں وائی پی جے کے زیر کنترول ایک گاوں پر قبضہ کرلیا۔

اب تک وائی پی جے کے آٹح سو سے زیادہ ٹھکانے ترک فوجوں کے فضائی حملوں میں تباہ ہوچکے ہیں۔

عفرین میں صحت عامہ سے متعلق اداروں کی رپورٹ کے مطابق ترک فوجوں کے حملوں میں اب تک عفرین میں ۱۹۲ نہتے شہری بھی مارے گئے ہیں جبکہ ۵۷۴ دیگر عام شہری زخمی ہیں جن میں خواتین اور بچے بھی شامل ہیں۔
 
Share/Save/Bookmark